تحفظ جمہوریت کی خاطرقربانی کا صلہ، جا وید ہاشمی کو گورنر پنجاب بنائے جانے کا فیصلہ

اسلام آباد (خبر نگار خصوصی) پاکستان مسلم لیگ (نواز) کی قیادت نے جمہوریت بچانے کی خاطر اپنی قومی اسمبلی کی نشست اور پی ٹی آئی کی صدارت قربان کرنے پر مخدوم جاوید ہاشمی کو خراج تحسین پیش کرنے اور اس کے صلے میں ان کو گورنر پنجاب کا عہدہ پیش کرنے پرغور شروع کر دیا ہے، تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ کے صدر نواز شریف کو پارٹی کے بعض رہنماؤں نے تجویز پیش کی ہے کہ مسلم لیگ جمہوریت کے تحفظ کے لئے جاوید ہاشمی کی طرف سے دی گئی قربا نی پر ان کو ان کےرتبے اور مقام کے مطابق صلہ دے ، ملتان میں حالیہ ضمنی الیکشن میں اپنی نشست ہار جانے کے بعد مرکز میں جاوید ہاشمی کو کوئی عہدہ ملنا مشکل نظر آتا ہے جس وجہ سے اب لیگی قیادت نے ان کو صوبہ پنجاب کا گورنر بنانے پر غور شروع کر دیا ہے، موجودہ گورنر پنجاب چودھری سرور کے شہباز شریف کے ساتھ اختلافات اور حالیہ سیاسی بحران میں مشکوک کردار کی وجہ سے ان کو گورنر کے عہدے سے ہٹا کر مرکز میں مشیر کا عہدہ دئیے جانے کا امکان ہے۔ اس صورت میں مسلم لیگ نواز جنوبی پنجاب سے تعلق رکھنے والے کسی اہم پارٹی رہنما کو گورنر پنجاب کے عہدے پر تعینات کرنے پر غور کر رہی ہے، کھوسہ فیملی کی شریف خاندان سے حالیہ کچھ عرصے سے دوری اور حالیہ بحران کے دوران جاوید ہاشمی کے بے لوث کرداراور ناقابل فراموش قربانی دینے کی وجہ سے اب ان کا نام گورنر پنجاب کے عہدے کے لئے مجوزہ ناموں میں سر فہرست ہے۔ ذرائع کے مطابق مسلم لیگ نواز کے صدرا ور وزیر اعظم نواز شریف اس بارے میں جلد ہی حتمی فیصلہ کر دیں گے۔

 

 

 

Related posts

Leave a Comment