اکیڈمک ایکسیلنس فورم یونیورسٹی اساتذہ کی ترقی کے لئے کام کرے گا۔ ڈاکٹر غازی

اسلام آباد (بیورورپورٹ) اکیڈمک ایکسیلنس فورم کا مقصد بین الاقوامی اسلامی یونیورسٹی، اسلام آباد کے اساتذہ اور محققین کے لئے ترقی و سربلندی کی منازل حاصل کرنے کے لئے مناسب اور سازگار ماحول کی فراہمی کے لئے کام کرنا ہے۔ اس مقصد کے حصول کے لئے ہم نے ایک تفصیلی منشور ترتیب دیا ہے جس پر ہم تمام اساتذہ کرام اور محقیقین جامعہ کے تعاون اور مسلسل و مربوط کوششوں کے ذریعے عملدرآمد کرنے کی کوششیں کریں گے۔ ان خیالات کے اظہار اکیڈمک ایکسیلنس فورم، انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی، اسلام آباد کے قائدین نے یونورسٹی کے اساتذہ اور محقیقین کے ساتھ ملاقاتوں کے دوران کیا۔ فورم کے قائدین بشمول اے ایس اے الیکشن 2015 کے امیدواران نے انتخابی مہم کے سلسلے میں یونیورسٹی کے تمام کیمپسس میں تمام شعبہ جات کے اساتذہ اور محقیقین سے اجتماعی اور انفرادی طور پر رابطے کئے اور انہیں اپنے منشور سے اگاہ گیا۔ فورم کے پینل کے امیدواراورعہدے یہ ہیں۔ صدرڈاکٹر انعام الحق غازی، نائب صدر، ڈاکٹر سیف الرحمان سیف عباسی، نائب صدر فی میل ڈاکٹر نور فاطمہ، جنرل سیکرٹری ڈاکٹر اسلام الدین، جوائنٹ سیکرٹری فی میل، ڈاکٹر شائستہ شہزادہ، جوائنت سیکرٹری میل عبدالوہاب جان، فنانس سیکرٹری امغان مظہر اور انفارمیشن سیکرٹری ڈاکٹر منظور احمد ناظر شامل ہیں۔PANEL FEMALE اکیڈمک ایکسیلنس فورم کے قائدین نے کہا کہ اساتذہ کے مسائل حل کرانے اوران کو ترقی کے مواقع فراہم کرنے کے لئے ہر ممکن کوششن کریں گے۔ اساتذہ کے وقار میں اضافہ، اور ان کو دفتر، لیپ ٹاپ اور دیگر لازمی سہولیات کی فراہمی ان کی اولین ترجیح ہو گی۔ ورک لوڈ کو مناسب سطح پر لانے، ریسرچ انسنٹوز اور کارکردگی کی بنیاد پر تنخواہوں میں اضافے کے لئے کام کر کے یونیورسٹی میں تحقیقی کلچر کو فروغ دیں گے۔ اساتذہ کے رہائشی مسائل کے حل کے لئے، رہائشی کالونی کی تعمیر، اسلام آباد کی دوسری جامعات کی طرح سی ڈی اے سے ہاوسنگ سوسائٹٰی کے لئے اراضی کے حصول اور تنہا رہنے والے اساتذہ کے لئے ہاسٹلز کے تمعیر کے لئے جدوجہد کریں گے۔ AEC'S MANIFESTOفورم کے قائدین نے کہا کہ بنیادی قابلیت پر پورا اترنے والے اساتذہ و محققین کی اعلیٰ عہدوں پر ترقی اور ایڈہاک و کنٹریکٹ پر کام کرنے والوں کو مستقل کرانا بھی ان کے ایجنڈے میں شامل ہے۔ انہوں نے کہا کہ ٹی ٹی ایس کے قوانین میں مناسب تبدیلی، ویلفیئر فنڈز کا بہتر استعمال، اساتذہ کی پیشہ وارانہ ترقی اور فیصلہ ساز اداروں میں ان کی نمائندگی، ان کے بچوں کے لئے ان کیمپس ماڈل سکول کی تعمیر اور تمام معاملات کو شفاف، برابری اور انصاف کے بنیاد پر چلانا ہمارے منشور میں شامل ہے۔ AEC. اکیڈمک ایکسیلنس فورم کے قائدین نے کہا کہ ہم عدم مساوات اور ناانصافیوں کاخاتمہ کر کے تمام اساتذہ کرام کے لئے ترقی کے یکساں مواقع پیدا کرنے کے لئے کام کریں گے، ہمارے کوئی ذاتی یا سیاسی مقاصد نہیں ہیں، ہمارا مقصد صرف اساتذہ کی فلاح و بہبود اور یونیورسٹی کی تعمیر و ترقی کے لئے کام کرناہے۔ اور اس مقصد کے حصول کے لئے ہمیں یونیورسٹی کے تمام اساتذہ و محقیقن کے اعتماد اور تعاون کی ضرورت ہے۔ مختلف بلاکس اور شعبہ جات کے دوروں کے دوران اساتذہ اور محققین جامعہ کے بڑی تعداد نے اکیڈمک ایکسیلنس فورم کے قائدین اور امیدواران کا پر تپاک خیرمقدم کیا اور انہیں
انتخابات میں ہر ممکن حمایت کا یقین دلایا۔
BANNER

Related posts

Leave a Comment