گلیات، میٹرک امتحانات کے دوران امتحانی مراکز پر بوٹی مافیا کا راج، تعلیمی نظام تباہ

خانسپور، نتھیاگلی، کالاباغ (نمائندگان گلیات ٹائمز) تبدیلی کے نعرے کھوکھلے نکلے، میٹرک امتحانات کے دوران گلیات کے سکولوں میں بوٹی مافیا کا راج، تعلیم بجٹ بڑھنے کے ساتھ ساتھ بوٹی مافیا کا ریٹ بھی بڑھ گیا، تفصیلات کے مطابق گلیات کے ہائی سکولوں میں میٹرک کے امتحانات جاری ہیں۔ اس دوران گلیات کے اکثر امتحانی مراکز پر بوٹی مافیا نے اپنا راج قائم کر رکھا ہے cheating pic.2اور کھلم کھلا نقل کر کے پرچے حل کرنے کا سلسلہ جاری ہے۔ امیدواروں کے ساتھ ان کے رشتہ دار امتحانی مراکز کے باہر موجود ہوتے ہیں جو پرچہ ہوتے ہی اس کو حاصل کر لیتے ہیں اورپھر اپنے اپنے رشتہ دار امیدواروں کو مختلف طریقوں سے نقلیں بھجواتے ہیں اس کے علاوہ امیدوار خود بھی نقل کے لئے تعلیمی مواد اپنے ساتھ لے کرامتحانی ہال میں جاتے ہیں اور کہیں کہیں کھلم کھلا تو کہیں کہیں امتحانی عملہ کی آنکھوں میں دھول جھونک کرنقل کرتے ہیں۔ cheating pic.1اکثر جگہوں پر امتحانی عملہ کو خرید لیا جاتا ہے جس کے بعد وہ اس سارے عمل میں مکمل مدد فراہم کرتا ہے یا پھر اپنی آنکھیں بند کر لیتا ہے، بوٹی مافیا نے امتحانی مراکز پراچانک چھاپوں کا بھی توڑ نکال لیا ہے، اور چھاپے کے لئے آنے والے عملے کی آمد سے پہلے ہی بوٹی مافیا کو اس کی خبر ہو جاتی ہے جس کی وجہ سے اکثر چھاپے ناکام رہتے ہیں اور ان نام نہاد چھاپوں کے باوجود بوٹی مافیا کا راج ماضی کی طرح آج بھی قائم ہے۔ صوبائی حکومت کی طرف سے تعلمی بجٹ بڑھانے اور اساتذہ کی حاضری یقینی بنانے کے لئے کیئے گئے عملی اقدامات کے باوجود گلیات کے سکولوں میں تعلیمی معیارابھی بھی زوال پزیر ہے جس کی وجہ سے طلبہ و طالبات نقل کا سہارا لینے پر مجبور ہیں، cheating pic.دوسری طرف حکومت کی طرف سے نگرانی کا نظام بہتر کرنے کے بعد بوٹی مافیا نے اپنا ریٹ بھی بڑھا دیا ہے اور طلبہ و طالبات سے امتحانی فیسوں کے ساتھ ساتھ امتحانی عملہ کو خوش کرنے یا خریدنے کے لئے ہونے والے اخراجات کی مد میں بھی رقم لی جاتی ہے۔ گلیات کے سیاسی و سماجی حلقوں نے بوٹی مافیا کا راج اور نقل کا سلسلہ نہ رکنے پر اپنی تشویش کا اظہار کیا ہے اور صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ نقل کی لعنت کے خاتمے کے لئے عملی اقدامات کرے۔

Related posts

Leave a Comment