جی ڈی اے قانون عمران خان کے دوستوں کی ایماپر لایا گیا، وہ جی ڈی اے کو اپنی لونڈی بنانا چاہتے ہیں، عبدالرزاق عباسی

ایبٹ آباد (نمائندہ گلیات ٹائمز) جی ڈی اے کا نیا قانون عمران خان کے کاروباری دوستوں کی ایما پر لایا گیا، وہ جی ڈی اے کو اپنی لونڈی بنانا چاہتے ہیں،عبدالرزاق عباسی، تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی ایبٹ آباد کے امیر عبدالرزاق عباسی نے بھی جی ڈی اے کے نئے قانون کی مخالفت کر دی ہے اور مطالبہ کیا ہے کہ جی ڈی اے کو کمپنی یا کارپوریشن بنانے کی بجائے اس کی پرانی حیثیت برقرار رکھی جائے۔ اتھارٹی کا اختیار حکومت کے پاس ہونا چائیے، بدعنوان افسران کو فارغ یا تبدیل کر کے اچھی انتظامیہ لائی جائے،7 غیر سرکاری ارکان گلیات کے حقیقی، مستقل اور پرانے رہائشی ہوں اور غیر سیاسی اور ایماندار افراد ہوں، عبدالرزاق عباسی نے جی ڈی اے کے نئے قانون کے بارے میں گلیات ٹائمز سے خصوصی طور پر بات کرتے ہوئے کہا کہ جی ڈی اے کا نیا قانون عمران خان کے چند کاروباری دوستوں کی ایما پر بنایا گیا ہے یہ کارباری لوگ گلیات کو اپنی لونڈی بنانا چاہتے ہیں، نئے قانون میں 7 غیر سرکاری ارکان کے لئے جو معیار مقرر کیا گیا ہے اس پر صرف عمران خان کے دوست ہی پورا اترتے ہیں، مقامی لوگ اس معیار کے حامل نہیں، علاقہ کے رکن صوبائی اسمبلی کو اتنی جرات نہیں کہ وہ مقامی لوگوں اور اپنے علاقہ کے مفاد کی خاطر اپنی پارٹی کے اندر بات کر سکیں، عبدالرزاق عباسی نے کہا کہ نئے قانون کو منظور کرانے سے پہلے گلیات کے لوگوں کو اعتماد میں لیا جانا چائیے تھا مگر ایسا نہیں کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ نئے قانون میں مقامی افراد کی جو تعریف کی گئی ہے وہ بھی قابل اعتراض ہے اس قانون کے مطابق اگر کسی فرد کا گلیات میں چھوٹا سا پلاٹ ہو چاہے اس کا تعلق پشاور یا سندھ سے ہو وہ مقامی فرد کہلائے گا۔ انہوں نے کہا کہ یہ گلیات کے حقیقی باشندوں کے ساتھ ظلم ہے۔ گلیات کے مقامی افراد صرف وہ لوگ ہیں جن کے آباواجداد صدیوں سے یہاں آباد ہیں اور ان کے مقامی ڈومیسائل بھی بنے ہوئے ہیں۔ انہوں نے جی ڈی اے کی پرانی حیثیت بحال کرنے اور اس کو حکومت کے زیرنگرانی اچھی انتظامیہ کے تحت چلانے کا مطالبہ کیاہے۔

Related posts

Leave a Comment